چینی کمپنی نے پاکستان میں نئی کار متعارف کرانے کا اعلان کر دیا

پاکستان میں معروف چینی بائیک ساز کمپنی یونائیٹڈ موٹرز نے آئندہ سال 800 سی سی کار متعارف کرانے کا اعلان کردیا، جسے 2019 میں 800 سی سی کی سوزوکی مہران کے 30 سالہ دور کے اختتام پر پیش کیا جائے گا۔اس بات کی تصدیق یونائیٹڈ موٹرز کے جنرل منیجر محمد افضل نے کی اور کہا کہ یونائیٹڈ آٹو انڈسٹریز کار اور پک اپ کی مینوفکچرنگ میں داخل ہونے جارہی ہے۔

انہوں نے کہا کہ کمپنی چینی ٹیکنالوجی کا استعمال کرے گی اور مارکیٹ میں اس کی گاڑیاں یونائیٹڈ کے برانڈ کے نام سے آئیں گی جبکہ دوسری طرف مارکیٹ میں ایسی رپورٹس گردش کر رہی ہے کہ یونائیٹڈ موٹرز، مہران اور راوی کی طرز پر گاڑی متعارف کرا رہا ہے۔

قمیت کے حوالے سے ان کا کہنا تھا کہ کمپنی اسے بہت کم قیمت ہی رکھنا چاہتی ہے تاہم حکام نے کمپنی کی گرین فیلڈ پروجیکیٹ میں سرمایہ کاری، مقامی سطح، پلانٹ کی صلاحیت اور ماہانہ پیداوار کے بارے میں کوئی تفصیلات فراہم نہیں کی۔

800 سی سی کی قسم میں آنے والی مہران، راوی اور بولان مشترکہ فروخت سب سے زیادہ ہے، جو تقریباً 8 ہزار گاڑیاں ماہانہ ہے۔پاک سوزوکی اب تک مارکیٹ میں غالب رہا ہے کیونکہ حال میں دوسری کمپنی کی جانب سے بنائی گئی ال حاج فاو (ایف اے ڈبلیو) کی قیمت تقریباً 10 لاکھ تک تھی جو راوی اور بولان سے زیادہ ہے۔

اس متعلق جاپانی کاروں کے دکانداروں کا کہنا ہے کہ یہ دیکھنا ابھی باقی ہے کہ یونائیٹڈ، پاک سوزوکی کے مارکیٹ شیئر میں کس طرح خلل ڈالتا ہے. دکانداروں نے کہا کہ چین کی موٹر سائیکل 2005 میں پہلے دفعہ متعارف کرائی گئی تھی، جس کی قیمت جاپانی بائیک سے 40 فیصد کم تھی، جس کے نتیجے میں صارفین چین کی بائیک کی جانب منتقل ہوئے اور اب یہ مارکیٹ میں 60 فیصد حصہ رکھتی ہے۔

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *