لاڑکانہ میں بھتاخور سرگرم

لاڑکانہ کاشہری بھتہ خور کی دھمکیوں سے اشتہاریوں کی طرح چھپ چھپ کر زندگی گزارنے پر مجبور ہوگیا۔
لاڑکانہ کے شیخ زید کالونی کے ڈاکٹر محمد حسن ہالیپوٹہ نے نجی ہوٹل میں پریس کانفرنس کرتے ہوئے کہا ہے کہ مجھے ایک شخص نے پانچ لاکھ روپے بھتہ دینے کو کہا نہ دینے پر انہوں نے مجھے جان سے مارنے کی دھمکیاں بھی دیں جب کے بھتہ خور نے اس کے گھر میں گھس کر اسے اور اس کے گھر والوں کو زدوقوپ کیا ،اور گھر میں توڑپھوڑ کی، محمد حسن ہالیپوٹہ نے مزید کہا کہ جان لیوا دھمکیاں ملنے کے بعد وہ پچھلے ایک سال سے اپنے بیوی بچوں کو لیکر دوسرے شہر میں چھپ چھپ کر رہ رہا ہے ، انہوں نے مزید کہا کہ اپنے والد کے انتقال پر وہ لاڑکانہ آیا تو اس کی تدفین کے موقع پر بھی اس کو دھمکیاں دیں گئیں ، محمد حسن ہالیپوٹہ نے مزید کہا کہ بھتہ مانگنے والے کا بھائی ایک صوبائی وزیر کا خاص آدمی ہے، جس کی وجہ سے اس کو کوئی گرفتار نہیں کررہا ہے ، اور اسے خدشہ ہے کہ کہیں وہ اس کے گھر پر قبضہ نہ کرلے، جس میں اس کی بھائی اور بہن رہ رہے ہیں، محمد حسن ہالیپوٹہ نے حکومت اعلیٰ عدلیہ سے اپیل کی کہ اس کو تحفظ فراہم کیا جائے اس سے قبل کے وہ اس کو کوئی نقصان پہنچائے۔

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *