جولائی میں کیا ہونے والا ہے۔ شاہد خاقان عباسی نے پردا فاش کردیا۔

وزیراعظم شاہد خاقان عباسی نے کہا ہے کہ پاکستان میں جمہوریت ہے اور رہے گی . جولائی میں گالیوں کی سیاست دم توڑ جائے گی اور عوام اپنی تقدیر کا فیصلہ کریں گے۔ تفصیلات کے مطابق وزیراعظم نے خاران میں تقریب سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ پاکستان میں ترقی ہوتی رہے گی . نوازشریف ترقی کا دوسرا نام ہے. ماضی میں دوسری حکومتیں رہیں لیکن کام کسی کا نظر نہیں آیا. ن لیگ کی حکومت نے ماضی کی سکیموں کو بھی مکمل کیا. 2013 سے پہلے بلوچستان میں بڑے بڑے منصوبے التوا کا شکار تھے. ترقی جھوٹے دعووں سے نہیں ہوتی۔ شاہد خاقان عباسی نے اپنے خطاب میں کہا کہ کراچی کو ایرانی سرحد سے ملانے والی شاہراہ اہم منصوبہ ہے. آج بلوچستان میں بہترین شاہراہوں کا جال بچھایا جا رہا ہے. ہمیشہ کوشش کی ترقی اس علاقے میں ہو جس کو اسکی ضرورت ہو. وہ وقت دور نہیں جب بلوچستان پاکستان کا امیر ترین صوبہ ہوگا۔ وزیراعظم کا مزید کہنا تھا کہ امن کیلئے فوج نے بھرپور کوششیں کیں اور قربانیاں دیں۔ آج ملک میں امن ہے۔ پاک فوج نے پوری جرات سے دہشتگردی کو ختم کیا۔ امن کی ضرورت تھی کوشش کی گئی سیاست پسند لوگوں کو اکٹھا کیا۔ بلوچستان کے ہر ضلع کو ایل پی جی فراہم کریں گے۔ یہ بلوچستان کے لوگوں کا حق ہے اور وفاقی حکومت بلوچستان میں سٹیڈیم کیلئے رقم فراہم کرے گی کیونکہ وسائل کے بغیر ترقی ممکن نہیں۔ شاہد خاقان عباسی نے کہا کہ وسائل کیلئے ٹیکس اصلاحات لائی جارہی ہیں۔ ن لیگ کی حکومت نے ٹیکس شرح کو آدھے سے بھی کم کر دیا ہے۔ ٹیکس شرح کم کی تاکہ لوگ انکم ٹیکس ادا کریں۔ تنقید کرنے والے بتائیں وہ ٹیکس دیتے ہیں یا نہیں۔وزیراعظم کا اپنے خطاب میں کہنا تھا کہ جنگ افغانستان کے مسائل کا حل نہیں۔ افغانستان کے مسئلے کے حل کیلئے افغان حکومت بیٹھے اور بات کرے۔ وزیراعظم نے کہا کہ دوسری طرف گالیوں کی سیاست ہے۔ فیصلہ آپ نے کرنا ہے کس کا ساتھ دینگے۔ ن لیگ نے ہمیشہ اصولوں اور خدمت کی سیاست کی جبکہ سینیٹ الیکشن میں خریدوفروخت ہوئی ۔

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *