روزے رکھنے کے طبی فوائد

مذہبی اہمیت کے ساتھ ساتھ روزے کے کئی طبی فوائد سے ہم آگاہ ہیں لیکن اب نئی تحقیق میں سائنسدانوں نے اس کا مزید ایک ایسا فائدہ بتا دیا ہے کہ سن کر ہر مسلمان سبحان اللہ کہنے پر مجبور ہو جائے گا۔ ویب سائٹ sciencetrends.com کی رپورٹ کے مطابق سائنسدانوں نے بتایا ہے کہ ”روزہ رکھنے سے جسم میں خام یا غیرمتشکل خلیوں (Stem Cells)کی افزائش ہوتی ہے۔ یہ وہ خلیے ہیں جوبافتوں کی نمو میں بنیادی کردار ادا کرتے ہیں اور خون میں نئے سفید خلیے بھی انہی کی وجہ سے پیدا ہوتے ہیں جس سے انسان میں کا مدافعتی نظام انتہائی مضبوط ہو جاتا ہے اور وہ ہر طرح کی بیماریوں سے محفوظ رہتا ہے۔

یونیورسٹی آف سدرن کیلیفورنیا کے سائنسدانوں نے اپنی اس تحقیق کے نتائج میں مزید بتایا ہے کہ ”صرف تین دن روزہ رکھنے سے انسان کا مدافعتی نظام پوری طرح تخلیق نو کے عمل سے گزرتا ہے۔ پورا مدافعتی نظام نئے سرے سے ترتیب پاتا ہے اور انتہائی طاقتور ہو جاتا ہے۔ “ تحقیقاتی ٹیم کے سربراہ پروفیسر والٹر لونگو کا کہنا تھا کہ ”روزے سے انسان کے میٹابولزم میں بھی تبدیلیاں رونما ہوتی ہیں۔ جسم کے بہت سے ایسے اجزاء جو ناکارہ اور مردہ ہو چکے ہوتے ہیں، روزے سے قدرتی طور پر جسم سے خارج ہو جاتے ہیں اور ان کی جگہ نئے اور تازہ اجزاء پیدا ہو جاتے ہیں۔ ان اجزاء کے پیدا ہونے کی وجہ خام خلیوں کی افزائش ہے جو ایسے اجزاء پیدا ہونے کی بنیاد ہوتے ہیں۔ “

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *