لدھیوالہ وڑائچ اسحاق کوٹ کے کونسلر گلزار احمد انصاری کا مسلح ہوکر اپنے غنڈوں کے ہمرا حوّا کی بیٹی ثمینہ انورپر سرعام برہنہ کر کے تشدد۔

گلزار احمد انصاری کونسلر خالد پرویز عاجز کا چہیتا ہے یہ دونوں جسم فروشی کے اڈے چلاتے ہیں اور جرائم پیشہ افراد کی پشت پناہی کرتے ہیں۔

میرا مقدمہ درج کے ہونے باوجود بھی پولیس نے اِن کوگرفتار نہیں کیا کیونکہ یہ دونوں پولیس کے ٹاؤٹ ہیں۔

نام نہاد شرافت کا لبادہ اوڑھنے والوں سے گلی محلے کی بہن بیٹوں کی عزتیں تک محفوظ نہیں،وزیر اعلیٰ پنجاب سے انصاف کی اپیل۔

لدھیوالہ وڑائچ (نامہ نگار) اسحاق کوٹ گلہ دربار والا کی رہائشی ثمینہ انور جو کہ ایمان بیوٹی پارلر کی مالکہ ہے پر آج سے چھ روز قبل خالد پرویز عاجز کے چہیتے کونسلر گلزار احمد انصاری نے مسلح آتشی اسلحہ ہو کر اپنے غنڈوں کی فوج کے ہمرا حوّ ا کی بیٹی ثمینہ انور کو سرعام برہنہ کرکے تشدد کا نشانہ بنایا۔ ثمینہ انور نے نمائندہ سے خصوصی گفتگو کرتے ہوئے بتایا کہ میرا جرم اتنا ہے کہ میں اِن نام نہاد شرفاء جو کہ سرعام شراب نوشی کرتے ہیں اور جسم فروشی کے اڈوں کی پشت پناہی کرتے ہیں اور یہاں تک کہ اپنے گھروں میں جسم فروشی کے اڈے بنا رکھے ہیں ۔اور محلے کی بہن بیٹوں کی عزتیں بھی ان سے محفوظ نہ ہیں ۔میں نے ان نام نہاد شرفاء گلزار احمد انصاری اور خالد پرویز عاجز کو ان کاموں سے منع کیا تو یہ لوگ میری جان کے دشمن بن گئے ہیں ۔کونسلر کے روپ میں معاشرے کے ان ناسوروں کے اصل چہرے اور ان کے دو نمبری کام انشاء اللہ اسحاق کوٹ کی عوام کے سامنے لاؤں گی سرعام گلی میں بیٹھ کر شراب پیتے اور سپلائی کرتے اور جرائم پیشہ افراد کو پناہ دیتے ہیں۔ اور گلی سے گزرنے والی راہگیر عورتوں اور لڑکیوں پر نازیبا فکرے کستے ہیں اس کے علاوہ اسحاق کوٹ اور دیگر نواح میں ہونے والی چوری کی وارداتیں یہ خود کرواتے ہیں چور پکڑے جانے کی صورت میں پولیس کی ٹاؤٹی اور ملی بھگت کا فائدہ اٹھاتے ہوئے پولیس کو بھاری نذرانہ دیکر چور کو معافی تلافی دلوائی جاتی ہے اہل محلہ کی عورتوں کو زبردستی جسم فروشی پر مجبور کیا جاتا ہے اور جو عورت ان کی یہ بات نہیں مانتی اسے سرعام برہنہ کرکے عبرت کا نشان بنا دیتے ہیں۔ خالد پرویز عاجز کونسلر کے روپ میں بہت بڑاانسانی سمگلر و ایجنٹ ہے جو اسحاق کوٹ کی غریب اور سادہ لوح عوام کو بیرون ملک کا جھانسہ دے کر لوٹ رہا ہے اس کے بھائی محمد آصف نے بھی مجھ پر تشدد کیا ہے لیکن خالد پرویز عاجز نے پولیس کو بھاری رشوت دیکر اس کا نام درخواست سے خارج کروا دیا ہے یہ لدھیوالہ وڑائچ اور اسحاق کوٹ کے غنڈے اور پولیس کے ٹاؤٹ ہونے کی وجہ سے ابھی تک میرے مقدمے میں گرفتار نہیں ہوئے۔ وزیر اعلیٰ پنجاب میاں محمد شہباز شریف،آئی جی پنجاب،ڈی آئی جی گوجرانوالہ،سی پی او گوجرانوالہ سے اپیل کرتی ہوں کہ سیاسی پشت پناہی کے حامل اور غنڈہ عناصر گلزار احمد انصاری اور خالد پرویز عاجز سے مجھے جان کا تحفظ فراہم کرتے ہوئے مجھے انصاف دلایا جائے اور میرے مقدمے کی میرٹ پر انکوائری کرکے گلزار احمد انصاری کو اور اس کے غنڈوں کو گرفتار کر کے سزا دی جائے۔

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *