کالمز

ہجرتوں کی شاعرہ فرزانہ ناز کی ناگہانی موت ۔ ذمہ دار کون؟

فرزانہ نازسے میری کبھی ملاقات نہیں ہوئی ۔ کوئی زیادہ شناسائی بھی نہیں تھی پھر بھی پی ایف یو سی کے واٹس ایپ گروپ میں جب اس کے قومی کتاب میلہ میں زخمی ہونے اور بعد ازاں وفات کی خبر دیکھی تو دکھ ہوا اور غصہ بھی آیا ۔دکھ اس لئے کہ ہجرتوں کی شاعرہ

پانامہ کیس کا حالیہ فیصلہ ۔۔۔ تحریر : عماد ظفر

عدالتی فیصلے اکثر خود بول کر اپنے سچے یا جھوٹے ہونے کی گواہی دیا کرتے ہیں. ذوالفقار علی بھٹو کا مقدمہ اس ضمن میں ایک مثال ہے جو آج بھی عدلیہ کے ماتھے پر ایک بدنما جھومر کی مانند سجی ہوئی ہے. ایسے فیصلے کی موجودگی اور مختلف ادواروں میں مارشل لا کی توثیق کرنے

جوتے

باؤ سائیڈ تے لا ۔۔۔لائسنس وکھا؟ گھر ہے صاب! تے گڈی دے کاغذ؟ وہ بھی صاب! گھر بچے دے رے نے! غلطی ہو گئی صاب! بچے غلطی دی سزا وی ہوندی اے! معاف کر دو صاب! اچھا فیر ہور کج وکھا دے! صاب بچوں کو سکول چھوڑنے آیا تھا۔ خالی ہاتھ ہوں! فیر دس کی

بانجھ کوکھ

آسمان پر چاروں اور گھٹا ٹوپ اندھیرا چھایا ہوا تھا ۔ زمین بنجر اور جل کر کوئلہ بن چکی تھی ۔ وہ زمین جو ہر سال سبز لبادہ اوڑھ کر اپنی چھب دکھلاتی تھی آج کسی بیوہ کی طرح سیاہ ماتمی لباس میں نظر آتی تھی ۔ گاؤں کے ہر گھر میں ایک بوڑھا اور

یمن میں غذائی قلت اور عالم انسانیت

یمن میں غذائی قلت اور عالم انسانیت طاہر یاسین طاہر جنگیں تباہی کے سوا کچھ بھی نہیں لاتیں۔بعض جنگوں کو فتاویٰ کا غلاف پہنا کر انھیں مقدس جنگ کا درجہ دینے کی کوشش بھی کی جاتی ہے۔مگر دائمی سچ یہی ہے کہ جنگیں نفرتوں کے بیج بو کر انسانوں کو ایک دوسرے کا قاتل بنا

مشعال خان، انتہا پسندی اور طلبہ اتحاد

مشعال خان، انتہا پسندی اور طلبہ اتحاد شاداب مرتضٰی انتہا پسند طالب علموں کے متشدد غول کے ہاتھوں ولی خان یونیورسٹی مردان کے طالب علم رفیق، مشعال خان کے وحشیانہ قتل اور لاش کی بے حرمتی نے “نئے پاکستان” کو کھلے عام سولی پر چڑھا دیا ہے اور ملک کے ہر درمند، حساس اور باشعور

مشعال خان سانحہ، حقائق اور سبق

جب بھائی فرنود عالم کی پوسٹ دیکھی تو میں ذہنی طور پر تیار تھا کہ کچھ برا ہوا ہے جس کو نہ دیکھنے یا شیئر کرنے کی درخواست وہ کر رہے ہیں۔ مگر جب دیکھا تو میں ماؤف ہو گیا۔ ایک ہجوم تھا حیوانوں کا، مگر حیوان بھی شاید اس قدر انسان نہیں ہوتے، اور